alwatantimes
Image default
بہار

جوگیرا سرارا کی دھن پر فلیریا کے خلاف مہم ہوئی تیز

حاجی پور: فلیریا کامرض انسانی زندگی کو مشکل بنا دیتا ہے،اسی پیغام کو عوام تک پہنچانے کے لئے ان دنوں مختلف گاؤں جیسے لال گنج، مہوا، پاٹیدھی بیلسر، حاجی پور صدر وغیرہ میں نکڑناٹک کا اہتمام کیا جارہا ہے۔ پٹنہ سے آئی اسٹریٹ ٹیم گانے گا کر لوگوں کو آگاہ کر رہی ہے کہ 24 مارچ سے شروع ہونے والی فلیریا کے خلاف مہم کو تقویت دینے کے لیے ویشالی ضلع میں اسٹریٹ ڈرامے منعقد کیے جا رہے ہیں۔ جس کا اہتمام ڈسٹرکٹ ہیلتھ کمیٹی ویشالی نے سنٹر فار ایڈوکیسی اینڈ ریسرچ کے تعاون سے کیا ہے۔ 21 سے 24 فروری تک ضلع کے مختلف علاقوں میں اسٹریٹ ڈرامے منعقد کیے جائیں گے۔ پٹنہ کے اسٹریٹ پلے کے فنکار اس نئے جوگیرا کو گا کر لوگوں کو 24 مارچ سے رات کے خون کے سروے میں خون کا ٹیسٹ کروانے اور تین طرح کی دوائیں لینے کی ترغیب دے رہے ہیں۔اس ڈرامے میں دکھایا گیا ہے کہ اسی گاؤں کے فلیریا سے متاثرہ شخص سکھدیو گاؤں والوں کو آگاہ کر رہا ہے۔ اپنا دکھ، درد بتاکر لوگوں سے کہہ رہا ہے کہ ایسی غلطی نہ کرو۔ کافی تگ و دو کے بعد گاؤں والے اس کی بات مان جاتے ہیں۔گاؤں میں پھگن کے مہینے میں پھگ اور جوگیرا گانے کی روایت ہے۔ اسی مقبول جوگیرہ کی طرز پر فلیریا کے خلاف عوامی آگاہی کے لیے ایک نیا جوگیرہ بنایا گیا ہے جسے فنکار جھوم جھوم کرناچتے، گاتے ہیں۔ یہ کافی موثر ثابت ہوا ہے۔ ڈرامے میں پرنس کمار، سمی، نیہا، اروند، آدرش، سوشانت، سنجے، دنیش اور لو کمار وغیرہ نے اداکاری کی ہے۔مہوا بلاک کے پوجھیاں گاؤں کے رہنے والے ببلو ٹھاکر نے ڈرامہ دیکھنے کے بعد بتایا کہ اس کی آنکھ کھل گئی۔ سارے وہم ختم ہو گئے۔ وہ خون کی جانچ کے لیے رات کے بلڈ سروے کیمپ میں ضرور جائیں گے اور گاؤں والوں سے بھی کہیں گے کہ وہ بغیر کسی ہچکچاہٹ کے دوا بھی لیں۔سول سرجن ڈاکٹر اکھلیش کمار موہن نے بتایا کہ ویشالی ضلع کے مختلف گاؤں میں مختلف دنوں میں رات کے خون کا سروے جاری ہے۔ لوگوں کو اس بارے میں معلومات دینے کے لیے ناٹک کی ٹیم کو پٹنہ سے خصوصی طور پر بلایا گیا ہے۔ اس میں رضاکار تنظیم سیفار اور کئیر انڈیا تعاون کر رہی ہے۔ انہوں نے دونوں اداروں کا شکریہ ادا کیا۔ضلع ویکٹر بورن ڈیزیز کنٹرول آفیسر ڈاکٹر ستیندر پرساد سنگھ نے بتایا کہ فلیریا سے متاثرہ علاقوں پر خصوصی توجہ دی جارہی ہے۔ اس بار 24 مارچ سے چلائی جانے والی مہم میں تین دوائیں کھلائی جائیں گی۔ یہ دوا ایک سال میں صرف دو بار دی جاتی ہے۔ اس کے کھانے سے فلیریا کا خاتمہ ممکن ہے۔ قبل ازیں 21 فروری سے ضلع کے 4 بلاکوں کے 8 مقامات پر فلیریا کی شناخت کے لیے رات کے خون کے سروے کا کام جاری ہے۔ یہ سروے 24 فروری تک جاری رہے گا۔ نائٹ بلڈ سروے میں شناخت شدہ علاقوں کے لوگوں کے خون کے ٹیسٹ کیے جا رہے ہیں۔

Related posts

گاندھی جی کی برسی پر قومی جذام مٹاؤ بیداری مہم چلائی جائے گی

alwatantimes

تعلیمی انقلاب گھر گھر برپا ہو، اتحاد امت وقت کی اہم ضرورت:قاضی انظار عالم قاسمی

alwatantimes

ریاستی حکومت 06 فروری تک اسکول کھولنے کیلئے رہنما خطوط جاری کرے، ورنہ ریاست بھر میں تعلیمی تحریک شروع ہوگی: شمائل احمد

alwatantimes

Leave a Comment